Sargaram | Newspaper

پیر 26 فروری 2024

ای-پیپر | E-paper

ایشیاکپ؛ ’’ موجودہ بالنگ لائن کو دیکھ کر وسیم، وقار کی یاد آجاتی ہے‘‘

Share

راولپنڈی ایکسپریس کے نام سے مشہور قومی ٹیم کے سابق اسپیڈ اسٹار شعیب اختر کا کہنا ہے کہ قومی ٹیم کی موجودہ فاسٹ بولنگ لائن اِپ کو دیکھ مجھے وسیم اکرم اور وقار یونس کی عظیم جوڑی کا سنہرا دور یاد آجاتا ہے۔

ایشیاکپ کے براڈکاسٹر اسٹار اسپورٹس کو دئیے گئے انٹرویو میں قومی ٹیم کے سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے کہا کہ نسیم، حارث اور شاہین کی موجودگی مجھے پرانے دنوں کی یاد دلاتا ہے، جس نے عالمی کرکٹ میں اپنا خوب پیدا کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ مجھے یہ اقرار کرنے میں کوئی شرم نہیں کہ شاہین شاہ آفریدی اس وقت اپنے کیرئیر کے عروج پر ہیں، حارث بھی انہیں کے نقش قدم پر چل رہے ہیں جبکہ نسیم شاہ کو صرف اتنا مشورہ ہے کہ وہ اسٹاک باؤلر بننے کے بجائے زیادہ وکٹ لینے والی گیندیں کریں۔

راولپنڈی ایکسپریس نے کہا کہ یہ تینوں بہت باصلاحیت ہیں، مجھے خوشی ہے کہ پاکستان بار بار ایسے تیز گیند باز پیدا کرنے کے قابل ہے۔

اس موقع پر شیعب اختر نے بھارت میں شیڈول ورلڈکپ کیلئے قومی ٹیم کو فیورٹ قرار دیا جبکہ ایشیاکپ اور میگا ایونٹ میں ہندوستانی ٹیم کو ہرانے کی پیشگوئی بھی کردی۔

ایشیاکپ میں تینوں پاکستانی پیسرز نے تین میچوں میں اب تک 23 وکٹیں حاصل کی ہیں، جو بھارت میں ہونے ورلڈکپ سے قبل ٹیموں پر اپنی دھاک بٹھارہے ہیں۔

روایتی حریف بھارت کے خلاف قومی پیسرز نے گروپ میچ میں ٹاپ آرڈر کو جھنجھوڑ کر رکھ دیا تھا تاہم میچ بارش کی نذر ہوگیا اور دونوں ٹیموں کو ایک ایک پوائنٹ دیا گیا۔

واضح رہے کہ وسیم اکرم اور وقار یونس کی جوڑی نے 900 سے زیادہ ون ڈے وکٹیں حاصل کیں جبکہ پاکستان کے پاس عظیم فاسٹ باؤلر پیدا کرنے کی تاریخ رہی ہے جن میں فضل محمود، سرفراز نواز اور ورلڈکپ جیتنے والے کپتان عمران خان شامل ہیں۔

Share this Article
- اشتہارات -
Ad imageAd image