Sargaram | Newspaper

اتوار 03 مارچ 2024

ای-پیپر | E-paper

سندھ: کچے میں انٹرنیٹ کی سہولت ختم کرنے کا حکم، فوج کیساتھ ملکر آپریشن کا فیصلہ

Share

کراچی: نگران وزیراعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر نے کچے میں انٹرنیٹ کی سہولت ختم کرنےکا حکم دے دیا۔

نگران وزیر اعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر کی زیر صدارت کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں صوبائی وزرا، چیف سیکرٹری ڈاکٹر فخر عالم، آئی جی سندھ رفعت مختار سمیت پرنسپل سیکرٹری حسن نقوی، ایڈووکیٹ جنرل، پراسیکیوٹر جنرل اور دیگر متعلقہ افسران شریک ہوئے۔

اجلاس میں آئی جی سندھ نے کابینہ کو صوبے میں امن و امان کی صورتحال پر بریفنگ دی۔

آئی جی نے بتایا کہ 2023 میں 218 لوگ اغوا ہوئے جن میں سے 207 بازیاب ہوئے اور 11 لوگ ابھی تک یرغمال ہیں۔

اس موقع پر نگران وزیراعلیٰ سندھ نے آئی جی کو مغویوں کو فوری بازیاب کرانے کی ہدایت کی۔

آئی جی سندھ نے کچے میں ڈاکوؤں کے خلاف آپریشن پر بھی بریفنگ دی جس پر نگران وزیراعلیٰ نے کہا کہ  کچے میں اچھی شہرت کے حامل پولیس افسران اور اہلکار تعینات کیے جائیں اور جو پولیس والے اچھی کارکردگی نہ کریں ان کو تبدیل کریں۔

نگران وزیراعلیٰ جسٹس (ر) مقبول باقر نے حکم دیا کہ کچے کے علاقے میں انٹرنیٹ کی سہولت فوری ختم کی جائے،  گھوٹکی کندھ کوٹ پل کی تعمیرکےکام کا آغاز کیاجائے۔

اس دوران سندھ کابینہ نے کچے میں پولیس، رینجرز اور فوج کے ساتھ آپریشن کا فیصلہ کیا۔

Share this Article
- اشتہارات -
Ad imageAd image